ممبئی : عامر خان خود کو کمرے میں بند کرکے کیوں روتے ہیں؟ اداکار نے بتادیا

ممبئی : بالی ووڈ کے مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان نے ایک انٹرویو کے دوران خود کو کمرے میں بند کرکے رونے کی وجہ بتائی ہے۔ حال ہی میں ایک انٹرویو کے دوران عامر خان نے اپنی زندگی سے متعلق کئی دلچسپ باتیں بتائیں۔ انٹرویو میں جب عامر خان سے ان کی فلموں کے کامیاب یا ناکام ہونے سے متعلق ان کے ردعمل کے بارے میں پوچھا گیا تو مسٹر پرفیکشنسٹ نے بتایا کہ جب میری فلمیں فلاپ ہوتی ہیں تو میں خود کو کمرے میں بند کرکے بہت روتا ہوں۔عامر خان کا کہنا تھا کہ صرف فلاپ ہونے پر نہیں بلکہ جب میری فلمیں باکس آفس پر کامیاب ہوتی ہیں تب بھی مجھے رونا آجاتا ہے لیکن وہ خوشی کے آنسو ہوتے ہیں۔ میں بہت آسانی سے رونے لگتا ہوں۔ عامر خان نے رونے سے متعلق ماضی کا ایک دلچسپ واقعہ بتاتے ہوئے کہا کہ ایک بارتو میں فلم کے سیٹ پر ہی روپڑا تھا۔ یہ اس وقت ہوا تھا جب میں فلم ’’دل‘‘ کی شوٹنگ کررہا تھا اور ایک ڈانس اسٹیپ صحیح سے کر نہیں پارہا تھا۔ اس وقت سروج خان میرے پاس آئیں اور مجھے ڈانس اسٹیپ دوبارہ سمجھانے کی کوشش کرنے لگیں۔ اس وقت میں آنسوؤں پر قابو نہ رکھ سکا اور فلم کے سیٹ پر پورے یونٹ کے سامنے رو پڑا۔ عامر خان نے مزید بتایا کہ اپنی فلم کی ریلیز سے قبل وہ بہت زیادہ پریشان ہوجاتے ہیں جیسے کہ ابھی ہیں۔ یہاں تک کہ ان کی بھوک اور نیند بھی ختم ہوجاتی ہے اور وہ گھنٹوں تک جاگتے رہتے ہیں اور وہ وقت کتابیں پڑھ کر یا ٹی وی دیکھ کر گزارتے ہیں۔ واضح رہے کہ عامر خان اور کرینہ کپور کی فلم ’’لال سنگھ چڈھا‘‘ اگلے سال 14 اپریل 2022 کو ریلیز کی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں