ٹوکیو : یہ سیڑھیاں آپ کا دماغ چکرا کر رکھ دیں گی

ن عجیب و غریب سیڑھیوں کو اس سال کا بہترین بصری دھوکا بھی قرار دیا جاچکا ہے 

ٹوکیو ( انٹرنیشنل ڈیسک ) ایک جاپانی ریاضی دان نے نظر کو دھوکا دینے اور دماغ کو چکرانے والی ایسی سیڑھیاں بنائی ہیں جنہیں دیکھ کر معلوم ہی نہیں ہوتا کہ ان کا کونسا سرا اوپر ہے اور کونسا نیچے۔ اس عجیب و غریب ساخت نے، جسے ’’شروئڈر کی سیڑھیاں‘‘ بھی کہا جاتا ہے، موجودہ سال کے بہترین بصری دھوکے (illusion) کا اعزاز بھی اپنے نام کرلیا ہے۔ میجی یونیورسٹی، جاپان میں ریاضی کے پروفیسر کوکیچی سوگیہارا کو عجیب و غریب اور ناقابلِ یقین اشکال تیار کرنے میں خصوصی مہارت حاصل ہے اور یہی ان کی وجہِ شہرت بھی ہے۔واضح رہے کہ ’’شروئڈر کی سیڑھیاں‘‘ (Schröder Staircase) کہلانے والا یہ بصری دھوکا سب سے پہلے 1858ء میں ایک جرمن ریاضی داں ہنرخ شروئڈر نے وضع کیا تھا۔ پروفیسر سوگیہارا نے اسی بصری دھوکے کو ’’شروئڈر کی تھری ڈی سیڑھیاں‘‘ کے نام سے نہ صرف ایک نئے انداز میں پیش کیا ہے بلکہ ایک چھوٹی سی یوٹیوب ویڈیو میں اس بصری دھوکے کی حقیقت بھی دکھائی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں