لاہور : سرکاری ملازم خاتون کے انتقال پر شوہر کو نوکری ملے گی ؛ لاہور ہائیکورٹ

لاہور : ہائیکورٹ کے جسٹس شان گل کا تاریخی فیصلہ ، لاہور ہائیکورٹ نے دوران سروس انتقال کرجانے والی سرکاری ملازمہ کے شوہر کو نوکری دینے کے حوالے سے تاریخی فیصلہ جاری کردیا ۔ جسٹس محمد شان گل نے فیصلے میں کہا کہ یہ بات بھی انتہائی مضحکہ خیز ہے کہ رنڈوا کبھی بیوی پر انحصار نہیں کرسکتا لہٰذا رولز 17 اے کے کا فائدہ مرد کو نہیں دیا جاسکتا ۔ ایک عرت بھی اتنی ہی سول سرونٹ ہے جتنا ایک مرد ہے۔ ایگزیکٹو کی جانب سے قانون کی تشریح محض لفظی بنیادوں پر کی گئی جبکہ اسکے مقاصد کو مدنظر نہیں رکھا گیا ۔ یہ بات انتہائی گستاخانہ اور بے جا ہے کیونکہ موجودہ دور میں خواتین اپنی آزادی کی طرف بڑھی ہیں ۔ سرکاری ملازم خاتون کے انتقال کے بعد شوہر کو نوکری ملے گی ۔ عدالت نے پنجاب حکومت کو پنجاب سول سرونٹس ایکٹ 1974ء کے رول 17 اے میں ترمیم کرنے کا حکم دے دیا ۔ فیصلے کے مطابق تمام حقائق سے یہ بات ثابت ہوئی ہے کہ سول سرونٹس کا رولز 17 اے موجودہ شکل میں امتیازی ہے جو کہ آرٹیکل 4 ، 25، 27 سے متضاد ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں